ابھی آنے والا ہے Wed 6:00 PM  AEST
ابھی آنے والا ہے شروع ہوگا 
Live
Urdu radio
ایس بی ایس اردو

نوجوانوں میں آن لائن شاپنگ کے بڑھتے رحجانات اور پاکستانی ملبوسات کی مقبولیت

Fatima smiling for the camera in her Eid outfit. Source: Fatima Zubair

ہمارا لباس ہماری انفرادی اور قومی شخصیت کا عکاس ہے اور آسٹریلیا میں مقیم پاکستانی اس بات سے بخوبی واقف ہیں۔ اسی لیے انھوں نے اپنی آنے والی نسلوں میں اس ثقافت کو پروان چڑھایا ہے جسکی وجہ سے یہاں کی نوجوان نسل اپنی مختلف تقاریب اور روز مرہ زندگی میں پاکستانی لباس زیب تن کرنا پسند کرتی ہے۔

آسٹریلیا میں پاکستانی تارکین وطن کی تعداد میں ہرسال اضافہ ہورہا ہے۔ ان افراد میں شہریوں اور پی آر ہولڈرز کیساتھ ساتھ طالبعلموں کی بھی ایک بڑی تعداد شامل ہے۔ ان تمام طبقات کے لوگوں میں بیشتر افراد آسٹریلیا کو اپنا مستقل ٹھکانہ بنانے کی امید میں یہاں آتے ہیں۔ لیکن اپنے خوابوں کے علاوہ ایک انتہائی اہم چیز ہے جو یہ افراد اپنے دلوں میں بسائے یہاں آتے ہیں اور وہ ہے اپنے آبائی ملک پاکستان کی ثقافت۔ اس ثقافت کے اظہار کے مختلف اور منفرد انداز ہیں جن میں سے ایک پاکستان کا لباس ہے۔  

ہمارا لباس ہماری انفرادی اور قومی شخصیت کا عکاس ہے اور آسٹریلیا میں مقیم پاکستانی اس بات سے بخوبی واقف ہیں۔ اسی لیے انھوں نے اپنی آنے والی نسلوں میں اس ثقافت کو پروان چڑھایا ہے جسکی وجہ سے یہاں کی نوجوان نسل اپنی مختلف تقاریب اور روز مرہ زندگی میں پاکستانی لباس زیب تن کرنا پسند کرتی ہے۔

بظاہر پاکستان سے شاپنگ کرنے کے دو سب سے آسان طریقے ہیں۔ ایک تو یہاں موجود لوگ پاکستان میں اپنے رشتہ داروں یا عزیز و اقارب کی مدد لیتے ہیں یا پھر باقی دنیا کی طرح آن لائن شاپنگ کے دلدادا ہیں۔

اس سلسلے میں ایس بی ایس نے سڈ نی میں مقیم فاطمہ زبیر سے بات کی ہے جو آسٹریلیا میں پیدا ہوئیں لیکن پاکستانی لباس کی آن لائن شاپنگ کو بے حد پسند کرتی ہیں۔

فاطمہ کا کہنا ہے کہ پاکستان سے آن لائن شاپنگ کے بہت سے فوائد ہیں، جس میں سب سے بڑی وجہ زیادہ ورائٹی اور کپڑوں کا بہتر معیار ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ وہ گھر میں پہننے والے کپڑوں سے لے کر فنکشنز پر پہنے جانے والے کپڑوں تک کی آن لائن شاپنگ کرتی ہیں۔ انھوں نے مزید کہا کہ سڈنی میں پاکستانی ڈیزائنرز کی ایک دو آوٹ لیٹس موجود ہیں مگر وہاں کپڑوں کا معیاراور ورائٹی مناسب نہ ہونے کے ساتھ ساتھ قیمتیں بھی زیادہ ہوتی ہیں۔ فاطمہ کے مطابق پاکستانی ڈزائنرز کو آسٹریلیا میں اپنے سٹورز کھولنے چاہیئے تاکہ پاکستانی کپڑوں کی مارکیٹ میں اضافہ ہو کیونکہ پاکستانیوں کے علاوہ انڈین، بنگلادیشی اور دوسرے ممالک کے لوگ بھی پاکستانی طرز کے ملبوسات میں دلچسپی رکھتے ہیں۔

جب ان سے پوچھا گیا کہ پاکستانی برینڈز کی آسٹریلین مارکیٹ تک آسان رسائی کیسے ممکن بنائی جاسکتی ہے تو انکا کہنا تھا کہ سب سے پہلے تو دونوں ممالک کی حکومتوں کو درآمدات اور برآمدات بڑھانے کیلیے شپنگ کاسٹ میں کمی کرنی چاہیئے ۔ ایسا کرنے سے ناصرف صارفین بلکہ بزنسز کی بھی حوصلہ افزائی ہوگی اور ٹیکسٹائل انڈسٹری کو فروغ ملے گا۔

Mahjabeen Khan
Mahjabeen Khan poses for the camera on her birthday.
Mahjabeen Khan

اسی سلسلے میں ایس بی ایس نے پوسٹ ڈاک اسٹوڈنٹ مہاجبین خان سےبھی بات کی جواپنے لئے آن لائن شاپنگ کو ہی خریدوفروخت کا بہترین ذریعہ سمجھتی ہیں۔ انکے لیے آن لائن شاپنگ صرف ایک مشغلہ نہیں بلکہ وقت کے استعمال کا بہترین ذریعہ ہے۔ انھوں نے کہا کہ جب سے وہ آسٹریلیا آئی ہیں تب سے انکی آن لائن شاپنگ کے رحجان میں اضافہ ہوا ہے۔ جسکی ایک وجہ تو پاکستانی ملبوسات سے محبت ہے اور دوسری اہم وجہ وقت بچانا ہے۔ مہاجبین نے کہا کہ مجھے عاصم جوفہ، آغانور، کھاڈی اور نشات برینڈز کے کپڑے آن لائن خریدنا پسند ہے اور میں سال میں چار سے پانچ مرتبہ پاکستان سے کپڑے منگوا لیتی ہیں۔

انھوں نے مزید بتایا کہ وہ پاکستان سے دو طریقوں سے کپڑے منگواتی ہیں۔ ایک تو وہ کپڑے آن لائن خرید کر اپنے پاکستانی گھر کے پتہ پر ڈلیور کرواتی ہیں اور پھر انکی بہن انکو آسٹریلوی پتہ پر ارسال کردیتی ہیں اور دوسرا طریقہ ڈیزائنر سے براہ راست آرڈر پر منگواتی ہیں۔ پاکستانی طالبعلموں میں آن لائن شاپنگ کے رحجان کے سوال کے جواب پر انھوں نے بتایا کہ میرے مطابق طالبعلموں میں آن لائن شاپنگ کا رحجان بڑھ رہا ہے۔ اسکی اہم وجہ یہ ہے کہ ہم اپنے ملک سے دور ضرور ہیں لیکن ہم اپنے ملک کے لباس کو پہن کر خوش ہوتے ہیں۔ میں اپنی بات کروں تو اپنے مذہبی اور سماجی تہواروں جیسے عید پر اپنے پاکستانی کپٹرے پہننا پسند کرتی ہوں۔

ہماری دونوں مہمانوں کی گفتگو سے یہ اخذ کیا جاسکتا ہے کہ پاکستانی ملبوسات کی مانگ میں اضافہ ہورہا ہے جسکو مزید بہتر بنانے کیلیے پاکستانی ڈزائنرز کو یہاں فیسٹیولز اور شوز کرنے چاہیئں۔ اسکے علاوہ دونوں ممالک کی حکومتوں کو تجارتی معاہدے بھی کرنے چاہیئں۔   


پوڈ کاسٹ سننے کے لئے نیچے دئے اپنے پسندیدہ پوڈ کاسٹ پلیٹ فارم سے سنئے 

 

Coming up next

# TITLE RELEASED TIME MORE
نوجوانوں میں آن لائن شاپنگ کے بڑھتے رحجانات اور پاکستانی ملبوسات کی مقبولیت 17/01/2022 2:00:10 ...
کیا تارکینِ وطن ووٹرز امیدوار کے بارے میں معلومات کر کے ووٹ ڈالتے ہیں؟ 19/05/2022 00:10 ...
ایس بی ایس اردو خبریں 19 مئی 2022 19/05/2022 04:23 ...
'فوٹی' کیا ہے؟ آسٹریلین کھیل کے بارے میں وہ سب کچھ جو آپ جاننا چاہتے ہیں 18/05/2022 22:00 ...
امیگرنٹ خواتین عملی سیاست سے دور کیوں 17/05/2022 15:07 ...
ایس بی ایس اردو خبریں 17 مئی 2022 17/05/2022 05:13 ...
پاکستانی کمیونیٹی آسٹریلیا کے وفاقی انتخابات کے بارے میں کیا سوچتی ہے؟ 17/05/2022 45:08 ...
ایس بی ایس اردو خبریں 16 مئی 2022 16/05/2022 00:03 ...
سابق آسٹریلین کرکٹر اینڈریوں سائیمنڈس کی کار حادثے میں ہلاکت پر کرکٹ کی دنیا سوگوار 15/05/2022 00:07 ...
تارک وطن خواتین ووٹ دیتے ہوئے کیا سوچتی ہیں ؟ 15/05/2022 07:00 ...
View More